مسلم لیگ (ن) نے صحت انصاف کارڈ پروگرام کی تحقیات کیلئے دو درخواستیں جمع کرادیں

اسلام آباد: (27 فروری 2020) مسلم لیگ (ن) نے صحت انصاف کارڈ پروگرام کی تحقیات کیلئے اسپیکر قومی اسمبلی کو دو درخواستیں دے دیں۔ مسلم لیگ (ن) نے اعتراض اٹھایا ہے کہ پی ٹی آئی حکومت صحت انصاف کارڈ سے اپنی تشہیری مہم چلا رہی ہے۔

مسلم لیگ (ن) کی جانب سے لیگی اراکین اسمبلی محسن شاہنواز رانجھا اور چوہدری نور الحسن ٹوانہ نے صحت انصاف کارڈ پروگرام  کی تحقیقات کیلئے درخواستیں اسپیکر قومی اسمبلی کوجمع کرائیں۔ درخواست میں کہا گیا کہ اسپیکر تحقیقاتی ریفرنس قائمہ کمیٹی اطلاعات اور قائمہ کمیٹی نیشنل ہیلتھ کو بھجوائیں۔ حکومت عوام کے ٹیکس کا پیسہ اپنی ذاتی تشہیر پر خرچ نہیں کرسکتی۔ صحت انصاف کارڈ کو تحریک انصاف کا پارٹی پرچم بنایا گیا ہے۔ پروگرام کے نام کو صحت انصاف میں تبدیل کیا گیا۔

درخواست کے مطابق انصاف کا لفظ تحریک انصاف نے پارٹی نام سے منتخب کیا جو غیرقانونی ہے۔ سپریم کورٹ اس معاملے پر 28 فروری 2018ء کو حکم بھی جاری کرچکی ہے۔ سپریم کورٹ کے حکم پر شہباز شریف سے تشہیر کا پیسہ واپس لینے کا کہا گیا تھا۔ حکومت سپریم کورٹ کے اس فیصلے کی کھلم کھلا خلاف ورزی کررہی ہے۔ فیصلے کے مطابق حکومت اپنی ذاتی تشہیر پر عوام کا پیسہ استعمال نہیں کر سکتی۔

درخواست جمع کرانے کے بعد گفتگو کرتے ہوئے محسن شاہنواز رانجھا نے کہا کہ حکومت صحت انصاف کارڈ پر ذاتی تشہیر کررہی ہے۔ وفاقی حکومت سپریم کورٹ کے احکامات کی بھی خلاف ورزی کررہی ہے۔ کوئی سیاسی جماعت کا پرچم پاکستان کے پرچم سے بالا نہیں ہوسکتا۔


 

WATCH LIVE NEWS

Samaa News TV PTV News Live Express News Live 92 NEWS HD LIVE Pakistan TV Channels

Meta Urdu News: This news section is a part of the largest Urdu News aggregator that provides access to over 15 leading sources of Urdu News and search facility of archived news since 2008.