پاکستان میں پابندی کاشکار فلم “جاوید اقبال” کےنام غیرملکی ایوارڈ

image

پاکستان میں پابندی کا شکار فلم جاوید اقبال نے یوکے ایشین فلم فیسٹیول میں 2 ایوارڈز جیت لئے۔

سو بچوں کے قاتل جاوید اقبال کی زندگی پر بننے والی فلم پر پاکستانی سینماؤں کے دروازے تو بند تھے لیکن اس فلم کو بین الاقوامی سطح پر کافی سراہا جارہا ہے۔

فلم “جاوید اقبال” دی اَن ٹولڈ اسٹوری آف آ سیریل کلر’ کو برطانیہ میں ہونے والے ’یو کے ایشین فلم فسیٹیول‘ میں پیش کیا گیا۔

فلم کے ہدایت کار ابوعلیحہ (علی سجاد شاہ( نے اپنے فیس بک پیج پر شیئر کیا ہے کہ “جاوید اقبال دی اَن ٹولڈ اسٹوری آف آ سیریل کلر” میں یاسر حسین کو پر بہترین اداکار اور ابوعلیحہ کو بہترین ہدایتکار کا ایوارڈ دیا گیا ہے۔

ابو علیحہ نے مزید کہا ہے کہ ’جاوید اقبال‘ کو ملنے والے یہ پہلے ایوارڈ ہیں۔ انشااللہ دنیائے سینما کے ہر معتبر فیسٹیول میں یہ فلم دکھائی جائے گی اور پاکستان کا نام روشن کرکے آئے گی۔فلم کی کامیابی مکمل ٹیم ورک کی بدولت ہے۔

جاوید اقبال میں اداکار یاسر حسین اور عائشہ عمر نے مرکزی کردار ادا کیا ہے۔ فلم کو رواں برس جنوری میں ریلیز کیا جانا تھا تاہم پہلے نمائس کی اجازت دینے کے بعد اس پر پابندی عائد کردی گئی تھی۔

جاوید اقبال کون تھا؟

سنہ 1999 میں  لاہور کے علاقے غازی آباد کے رہائشی جاوید اقبال نے 100 بچوں کو قتل کرکے ان کی لاشیں تیزاب میں ڈال کر تحلیل کرنے کا اعتتراف کیا تھا۔ بعد ازاں اس نے پولیس کو خود ہی گرفتاری دی تھی۔


News Source   News Source Text

مزید خبریں
آرٹ اور انٹرٹینمنٹ
مزید خبریں

Meta Urdu News: This news section is a part of the largest Urdu News aggregator that provides access to over 15 leading sources of Urdu News and search facility of archived news since 2008.