ترا نقشہ ہے دل میں اس طرح سے

Poet: Hamza Karam Turabi
By: Hamza Karam Turabi, Karachi

ترا نقشہ ہے دل میں اس طرح سے
کہ جیسے بات باندھی ہو گرھا سے

جو وہ گزرے تو وہ گزری ہے مجھ پر
بیاں ہوتا نہیں وہ سب زباں سے

ہوے فہرستِ دل سے ہم بھی خارج
کوئی تحریف جیسے داستاں سے

وہ اک پل میں ہوئے بیگانہ ہم سے
کہ جیسے تیر نکلا ہو کماں سے

کرم داغِ محبت مٹ چکا ہے
بس اب باقی بچے ہیں کچھ نشاں سے

Rate it:
29 May, 2020

More Sad Poetry

POPULAR POETRIES

FAMOUS POETS

About the Author: Hamza Karam Turabi
Visit 4 Other Poetries by Hamza Karam Turabi »
Currently, no details found about the poet. If you are the poet, Please update or create your Profile here >>

Reviews & Comments

Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City
Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City