جسے دیکھو وہی الجھا ہوا ہے

Poet: یو نس مجاز
By: یونس مجاز, Haripur Hazara

گئے اس کو مجازعرصہ ہوا ہے
مگر یہ دل وہیں اٹکا ہوا ہے

جسے دیکھو وہی الجھا ہوا ہے
"تماشا اس برس ایسا ہوا ہے"

بچھڑ نے کا جو ڈر لپٹا ہوا ہے
ترا چہرہ بھی تو اترا ہوا ہے

اسے یوں دیکھ کرلگتا ہے جیسے
زمانے بھر کاغم چمٹا ہوا ہے

اسے منزل ملےبھی تو کیونکر
مسافر راستہ بھٹکا ہوا ہے

بتا تے ہیں تری آنکھوں کے حلقے
کہ توبھی رات بھرجا گا ہوا ہے

نہیں معلوم غم کس کا ہے کس کو
نہیں سویا میں بھی عر صہ ہوا ہے

ہمارا سچ ہوا گم شور میں پھر
تمہارے جھوٹ کا چر چا ہوا ہے

گھٹائوں میں تری ذلفوں کے سارا
زمانہ اب تلک الجھا ہوا ہے

یونہی کشمیرہوا رنگیں نہیں ہے
شہیدوں کا لہو بکھرا ہوا ہے
 

Rate it:
21 Sep, 2019

More Sad Poetry

POPULAR POETRIES

FAMOUS POETS

About the Author: younas majaz
معروف کالم نگار وشاعر محمد یو نس مجاز، کا تعلق ہری پور ہزارہ سے ہے ایم اے اردو پشاور یونیورسٹی سے کیاگزشتہ تیس سال سے دنیا ء صحافت سے منسلک ہیں شا.. View More
Visit 3 Other Poetries by younas majaz »

Reviews & Comments

Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City
Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City