زرا ایک بار آزما کر تو دیکھ

Poet: نائمہ عدنان
By: Naima Adnan, Islamabad

زرا زمین کی گردش کو ناپ کر تو دیکھ
زرا اپنے آپ کو آزما کر تو دیکھ ۔

دیکھ کے تو کتنا اچھا ہے
دیکھ کے تیرے اندر کیا بچا ہے۔

اپنے بارے میں سوچ کر تو دیک زرا اپنے آپ کو کھوج کر تو دیکھ ۔
زرا دیکھ تو سہی کیا سچا ہے کیا برا ہے

ہو جا خود درست تو سب اچھا ہے۔
برداشت کی عادت ڈال

دل سے بغاوت نکال۔
بن جا سچا بس یہی

تیرے حق میں ہے اچھا۔
برے کا بدلہ اچھے سے دے

سزا کا بدلہ جفا سے دے۔
زرا اپنے آپ کو آزما کر تو دیکھ ۔

Rate it:
10 Aug, 2020

More Life Poetry

POPULAR POETRIES

FAMOUS POETS

About the Author: Naima Adnan
Visit Other Poetries by Naima Adnan »
Currently, no details found about the poet. If you are the poet, Please update or create your Profile here >>

Reviews & Comments

Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City
Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City