فلک کے ماہ و اختر دیکھ لیتا ہوں

Poet: Hasan Shamsi
By: F.H.SIDDIQUI, Lucknow ( India )

چھپائیں کتنا بھی وہ اپنا پیکر ، دیکھ لیتا ہوں
میں ان کو عشق کے جذبوں میں ڈھل کر دیکھ لیتا ہوں

عطا کی ہے خدا نے تھوڈی سی جوہر شناسی بھی
‘ میں اک شبنم کے قطرے میں سمندر دیکھ لیتا ہوں ‘

ہے فطرت میں قناعت ‘ تو فقط چکھتا ہوں تھوڑی سی
مزہ آیا اگر چکھ کر ، تو پی کر دیکھ لیتا ہوں

خدا محفوظ رکھتا ہے کرم سے خیر خواہوں کے
کہ ان کی آستینوں کے میں خنجر دیکھ لیتا ہوں

میں اپنی تنگدستی کو عیاں ہونے نہیں دیتا
بڑھانا ہو اگر پاؤں ، تو چادر دیکھ لیتا ہوں

تکلم سے ہی کر لیتا ہوں بس پہچان شجروں کی
میں نابینا ہوں لیکن تم سے بہتر دیکھ لیتا ہوں

نھیں پردیس میں جب سونے دیتی یاد بچوں کی
نم آںکھوں سے فلک کے ماہ و اختر دیکھ لیتا ہوں

بھلانے کو ‘ حسن ‘ میں اضطراب دور حاظر کو
بند آںکھوں سے حسیں یادوں کے منظر دیکھ لیتا ہوں

Rate it:
16 Jun, 2015

More General Poetry

POPULAR POETRIES

FAMOUS POETS
About the Author: F.H.SIDDIQUI
*Social science teacher and trainer

.. View More
Visit 158 Other Poetries by F.H.SIDDIQUI »

Reviews & Comments

buhat zbrdast buhat khoobsurat kalam hamesha ki tarah dair ayed lekin durust ayed aap apny kalam ki soghat dairsy bhi le kr aen tau malal nahi rehta q'un k shandar takhleeq k sath aty hain
khush rahain abad rahain
be happy and stay blessed always

By: uzma, Lahore on Jun, 18 2015

Shukrguzar hoon Uzma saheba aap ke khuloos ke liye ki taakheer se aane aur kootahiyon ke bawujood aap apni mohabbaton aur huslaafzai se nawaazti hain . Bahut duaaein aapko , Ramzaan e Kareem ki nubarakbad ke sath
By: F.H.SIDDIQUI, Karachi on Jun, 20 2015
Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City
Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City