قابل سجدہ کر دے

Poet: Malik Shahzaib Ali Nasir Awan
By: Malik Shahzaib Ali Nasir Awan, Lahore

مجھے اپنی بانہوں میں سمیٹ اور قابل سجدہ کر دے
یا ہجوم دہر میں پھینک اور مجھے رسوا کردے

تنہایئ میں تیری یاد، آتی ہے اکثر
اس یاد سے کہہ دے کہ مجھے تنہا کر دے

گر تیرے ہونٹوں پہ، کوئی دعا نہیں میرے لئے
تو خدارا اک احسان کر، کوئی بد دعا کر دے

میری زندگی تاریک ہے، دکھوں کے عذاب سے
کسی روز مسکرا کے آ ، ہر طرف ضیاء کر دے

میں ریزہ ریزہ بکھر چکا ہوں، غم حیات میں ناصر
تو اپنی زلف کے کنڈل میں مجھے یکجا کر دے

Rate it:
04 Jan, 2009

More Sad Poetry

POPULAR POETRIES

FAMOUS POETS