ناکامی

Poet: مرزا عبدالعلیم بیگ
By: Mirza Abdul Aleem Baig, Hefei, Anhui, China

میں نے ہر چند تمہیں بھولنا چاہا
غم عشق آشکوں میں بہانا چاہا

وہی افسانے میری سمت رواں ہیں کیوں؟
وہی بے سود خلش ہے میرے سینے میں کیوں؟

وہی شعلے میرے بدن میں نہاں ہیں کیوں؟
وہی بیکار تمنائیں جواں ہیں کیوں؟

سکوں مل نہ سکا میرے بے چین خیالوں کو
کثرت غم بھی میرے غم کا مداوا نہ ہوسکا کیوں؟

ہر اک درد کو اپنا تو لیا میرے دل نے
برہم ہے میرے تخیل کا شیرازہ کیوں؟

وہی بے جان ارادے‘ وہی بے رنگ سوال
میں بھی ناکام‘ تم بھی ناکام
 

Rate it:
09 Oct, 2020

More Sad Poetry

POPULAR POETRIES

FAMOUS POETS

About the Author: Mirza Abdul Aleem Baig
Visit Other Poetries by Mirza Abdul Aleem Baig »
Currently, no details found about the poet. If you are the poet, Please update or create your Profile here >>

Reviews & Comments

Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City
Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City