کرب کا ارتکا چل رہا ہے

Poet: Salaar
By: Salaar, Islamabad

کرب کا ارتکا چل رہا ہے
جنوں کا مرحلہ چل رہا ہے
ضرورت پڑی تو مدد مانگ لوں گا
جناب ابھی میرا حوصلہ چل رہا ہے
تیز تیز چل رہا ہوں تیری طرف
اور ساتھ ساتھ فاصلہ چل رہا ہے
اس کے آسانیاں ہی آسانیاں ہیں
محبت کا مسئلہ چل رہا ہے
احترام آدمیت میں چپ رہتا ہوں ورنہ
جانتا ہوں کس کے اندر کیا چل رہا ہے
اور
زمانہ تھک گیا چل چل چالیں
ساؔلار میرے ساتھ اللہ چل رہا ہے

Rate it:
09 Jul, 2017

More Sad Poetry

POPULAR POETRIES

FAMOUS POETS
About the Author: Salaar
Currently, no details found about the poet. If you are the poet, Please update or create your Profile here >>

Reviews & Comments

ارتقاء

By: uzma, Lahore on Jul, 10 2017

Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City
Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City