ہم تم

Poet: اریبہ خان
By: Areeba Khan, Karachi

نہ تم کچھ بول سکے
نہ میں نے کچھ سناؔ چاہ
ہمارا یہ رشتہ اک خاموش سا صحرا بن بیٹھ
کیا وجہ ٹھری تھی جو یہ نوبت آئ؟
معلوم نہیں شاید نفرتوں کے ڈھیر نے یہ آگ لگائ
باتوں کو درگزر کر کہ مل لیا کرتے تھے ہم کبھی
آج اک عرصہ ہو چلا ہے نہ میں نے کبھی بلایا نہ تم نے صدا لگائ
کچھ یادیں ہیں تمہاری میرے پاس
آگر ہو سکے تو لےجاؤ انھیں اپنے ساتھ
راستے اب اک نہیں ہمارے
کبھی ساتھ چلے تھے ہم تم سہارے
بکھر گئے ہیں ہم موتیاں بن کہ
نہ تم چن سکے اور نہ میں نے سمٹنا چاہ
کیونکہ ہمارا یہ رشتہ اک خاموش سا صحرا بن بیٹھا
 

Rate it:
22 Sep, 2020

More Life Poetry

POPULAR POETRIES

FAMOUS POETS

About the Author: Areeba Khan
Visit 9 Other Poetries by Areeba Khan »
Currently, no details found about the poet. If you are the poet, Please update or create your Profile here >>

Reviews & Comments

Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City
Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City