یہ جوہونٹوں پہ مسکان سجائےرکھتے ہیں

Poet: زھرہ زریں
By: zohra zreen, Faisalabad

یہ جوہونٹوں پہ مسکان سجائےرکھتے ہیں
ہم تو اس طور غم کو دل میں چھپائے رکھتے ہیں

ہر ایک دکھ کو سمجھتے ہیں کہ آخری دکھ ہے
یوں گراں زیست کے اسباب بنائے رکھتے ہیں

بزمِ اغیار میں ہنس ہنس کے چھپاتے ہیں الم
ھم آنا دل میں یوں ھی اپنے بسائے رکھتے ہیں

ھر کسی کو اپنے زخم دکھائے کیونکر
لوگ ظالم ہیں نمک ان پر گرائے رکھتے ہیں

اہل دنیا سے محبت کا نتیجہ ھے یہی
جام نفرت کا پیئے پر الفت پلائے رکھتے ہیں

یہ بھی سچ ہے کہ فطرت نہیں بدلا کرتی
پھر بھی رستے پہ تیرے آنکھ لگائے رکھتے ہیں

زریں سچ بات زمانے کو نہیں بھایا کرتی
پگلی کچھ سچ بھی دل میں چھپائے رکھتے ہیں

Rate it:
27 May, 2020

More Sad Poetry

POPULAR POETRIES

FAMOUS POETS

About the Author: zohra zreen
Visit Other Poetries by zohra zreen »
Currently, no details found about the poet. If you are the poet, Please update or create your Profile here >>

Reviews & Comments

Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City
Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City