نبھا کر رشتُوں کو ہم لوگ فن کاری نہیں کرتے

Poet: Naveed Ahmed Shakir
By: Naveed Shakir, Faisalabad

 نبھا کر رشتُوں کو ہم لوگ فن کاری نہیں کرتے
تعلق ہو جہاں اُن سے اداکاری نہیں کرتے

مقدم رکھتے ہیں ہم دوستوں کو دشمنوں کو بھی
کسی بھی حال میں ہم کوئی عیاری نہیں کرتے

کیا ہے فیصلہ ایمانداری سے کیا جب بھی
کوئی بھی ہوکسی کی بھی طرفداری نہیں کرتے

نجانے اس زمانے میں چلی ہیں کون سی لہریں
کوئی بھی بات ہو تو بات بھی ساری نہیں کرتے

یہ تنہائی مجھے اب کاٹنی ہے رفتہ رفتہ سے
کرونا کی وجہ سےکیوں ملنساری نہیں کرتے

 

Rate it:
11 Jun, 2020

More Sad Poetry

POPULAR POETRIES

FAMOUS POETS

About the Author: Naveed Shakir
Do Poetry and like poetry.. View More
Visit 45 Other Poetries by Naveed Shakir »

Reviews & Comments

Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City
Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City