Ajeeb hai ye dunya bhi

Poet: Saba Ijaz
By: Saba Ijaz, Okara

عجیب ہے یہ دنیا بھی
کسی کی بھی نہ بن سکی

ہر کوئی اس سے گلہ کرے
ہر ایک کو تباہ کرے

محبتوں کے جال ہیں
لوگ بھی کمال ہیں

ابتداء عشق حسین ہو
دل کے نہ مکین ہو

دنیا کی یہ مکاریاں
جھوٹ ہیں اور سازشیں

نہ خیال ہے بس زوال ہے
صبا یہ وہ دور ہے

جہاں جسموں کا ہی مول ہے
کرو یقیں تو مار دیں

جو نہ کرو تو گاڑ دیں
کرو منع جو پھر انہیں

مقدر بنیں یہ زلتیں جو چل جائے تمہیں پتا
پل کی خوشی کی یہ سزا

تو ہر آدمی سے تم ڈرو
نہ ملو ان سے پھر کبھی
 

Rate it:
16 Jul, 2020

More Sad Poetry

POPULAR POETRIES

FAMOUS POETS

About the Author: Saba Ijaz
Visit Other Poetries by Saba Ijaz »
Currently, no details found about the poet. If you are the poet, Please update or create your Profile here >>

Reviews & Comments

Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City
Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City