ارکان پارلیمنٹ کے دو ماہ تک بجلی کا بل ادا نہ کرنے پر بجلی کا میٹر کاٹنے کے احکامات جاری

اسلام آباد: (27 فروری 2020) سینیٹ کی ہاؤس کمیٹی نے بڑا فیصلہ کرلیا۔ پارلیمنٹ لاجز میں رہائش پزیر ارکان پارلیمنٹ کی جانب سے دو ماہ تک بجلی کا بل ادا نہ کرنے پر بجلی کا میٹر کاٹنے کے احکامات جاری کردیئے۔

سینیٹ ہاؤس کمیٹی کا اجلاس ڈپٹی چیئرمین سینیٹ سینیٹر سلیم مانڈوی والا کی زیرصدارت ہوا۔ اجلاس میں پارلیمنٹ لاجز کے اضافی بلاک کی تعمیر، بجلی کے بلوں، پارلیمنٹ لاجز میں بیوٹی پارلر کے قیام اور پانی کے معیار سے متعلق امور کا جائزہ لیا گیا۔

ڈپٹی چیئرمین سینیٹ نے ہدایت کی کہ بجلی کے بل پارلیمنٹرین کو لاجز میں بروقت فراہم کیے جائیں۔ ہاؤس کمیٹی نے یہ ہدایت بھی دی کہ پارلیمنٹ لاجز میں پارلیمنٹرین کے بجلی کے بل 2 ماہ ادا نہ کرنے پر کنکشن کاٹ دیا جائے اور سابق پارلیمنٹرین رہائشوں کے بل اُن سے ہی وصول کیے جائیں اور کمیٹی کو لسٹ فراہم کی جائے تاکہ اُن کو خط بھی لکھا جائے اور موجودہ رہائشوں پر پرانے کلیم نہ ڈالے جائیں۔

سینیٹ ہاؤس کمیٹی نے ڈائریکٹر واٹر سپلائی اسلام آباد کی طرف سے پانی کے ٹیسٹ کے حوالے سے فراہم کردہ رپورٹ پر اظہار تشویش کرتے ہوئے اسے غیر تسلی بخش قرار دیا۔

ڈپٹی چیئرمین سینیٹ نے کہا کہ متعلقہ وزیر اعتراف کرچکے وفاقی دالحکومت کو سپلائی کیا جانے والا پانی مضر صحت ہے، مگر ڈائریکٹر واٹر سپلائی اس کے برعکس رپورٹ فراہم کر رہے ہیں۔

انہوں نے پارلیمنٹ ہاؤس اور لاجز کو فراہم کیے جانے والے پانی کا معیار تھرڈ پارٹی سے ٹیسٹ کرانے کے احکامات جاری کرتے ہوئے کہا کہ سی ڈی اے ہاؤس کمیٹی کو پانی کے معیار سے متعلق ہر پندرہ دن بعد رپورٹ فراہم کی جائے۔

ہاؤس کمیٹی نے ذیلی کمیٹی کی لاجز کے اضافی بلاک کی تعمیر کے حوالے سے رپورٹ کو منظور کرلیا۔ کمیٹی کو بتایا گیا کہ اضافی بلاک کیلئے نیا کنسلٹنٹ ہائر کیا جا رہا ہے۔ 18 فروری کو ٹینڈر اُوپن ہو چکے ہیں۔ تین ہفتوں میں عمل مکمل ہوگا۔

چیئرمین سی ڈی اے نے کہا کہ پارلیمنٹ لاجز کے اضافی بلاک کی تعمیر کا منصوبہ 2011ء میں شروع ہوا تھا، پی سی ون ریوائز کرنا پڑے گا۔ منصوبے میں تاخیر کے ذمہ داروں کے تعین کے ساتھ منصوبے کی جلد سے جلد تکمیل ایک چیلنج ہے۔ کوشش ہے کہ منصوبہ میں مزید تاخیر نہ ہو اور مناسب بجٹ میں مکمل ہو۔

ہاؤس کمیٹی نے فیصلہ کیا کہ لاجز کے اضافی بلاک کی تعمیر میں پیشرفت کا جائزہ لینے کیلئے کمیٹی کا ہر ماہ اجلاس منعقد کیا جائے گا۔

ڈپٹی چیئرمین نے پارلیمنٹ لاجز میں بیوٹی پارلر کے جلد قیام کے حوالے سے احکامات دوبارہ جاری کردیئے۔ ڈپٹی چیئرمین نے سی ڈی اے حکام کو سینیٹر کی شکایات کے جلد حل کی ہدایت کی اور جواب طلب کیا کہ سی ڈی اے نے احکامات کے باوجود لاجز میں مرمت کے کام کے حوالے سے فنانشل پلان کیوں تیار نہیں کیا۔

سلیم مانڈوی والا نے کہا کہ سی ڈی اے کے معاملات دن بدن خراب ہو رہے ہیں۔ سی ڈی اے اپنی کارکردگی کو بہتر کرے اور درپیش مسائل کو جلد سے جلد حل کرے۔


 

WATCH LIVE NEWS

Samaa News TV PTV News Live Express News Live 92 NEWS HD LIVE Pakistan TV Channels

Meta Urdu News: This news section is a part of the largest Urdu News aggregator that provides access to over 15 leading sources of Urdu News and search facility of archived news since 2008.