اچھا موبائل خریدنے کیلئے یہ چند باتیں جاننا بہت ضروری ہیں

image

موبائل کی دنیا میں ہر روز ایک نئی ٹیکنالوجی کا اضافہ ہوتا ہے جس کی وجہ سے ہر شخص کو نیا موبائل خریدنے کی چاہ ہوتی ہے ۔

لیکن  نیا موبائل خریدنا ہر کسی کے بس کی بات نہیں ہوتی ہے البتہ جو لوگ نیا موبائل خریدنے کی استطاعت رکھتے ہیں وہ موبائل خریدنے سے پہلے ان باتوں کا خیال ضرور رکھیں۔

1۔ اسٹوریجیاد رکھیں کہ صرف زیادہ روم والا فون زیادہ فائلز کو ذخیرہ کرنے کی صلاحیت رکھتا ہے۔

اگر صارف کا استعمال بہت کم یا عام ہے تو اس کے لیے دو جی بی ریم اور 16 جی بی میموری والا فون کافی ہے جبکہ اس کو میموری کو کارڈ کی مدد سے بڑھایا بھی جا سکتا ہے۔

اسی طرح جو لوگ موبائل میں بہت زیادہ ڈیٹا رکھنا چاہتے ہیں ان کے لیے 128 جی بی اور اس سے بھی زیادہ میموری کے فون دسیتاب ہیں جبکہ ان میں بھی زیادہ تر میموری کارڈ کا آپشن ہوتا ہے، ان فونز کی ریم بھی زیادہ ہوتی ہے۔

2۔  کمیرا:یمرے کچھ صارفین کے لیے بہت اہمیت کے حامل ہوتے ہیں اور وہ فون خریدتے وقت فوکس کیمرے پر ہی رکھتے ہیں۔

مارکیٹ میں کمپنیاں بھی ایک دوسرے سے آگے نکلنے کے لیے زیادہ میگا پکسلز دینے کی کوشش میں ہیں لیکن ضروری نہیں کہ زیادہ پگسلز والے کیمرے زیادہ معیاری بھی ہوں کیونہ تصویر کے معیار کا تعلق آئی ایس او اور اپرچر لیول کے ساتھ ساتھ آٹو فوکس اسپیڈ سے بھی ہے۔

3۔ بیٹری لائف:بیٹری کی خصوصیات بھی موبائل کے صارف کے استعمال کے حساب سے مختلف ہوتی ہیں۔

اگر صارف ان لوگوں میں سے ہے جو ہے جو ایک ہی وقت میں سمارٹ ایپلی کیشنز کا ایک سیٹ کھولتے ہیں، یا ایک گیمر جو دن بھر گیمز کے فیچر پر رہتا ہے، یا پھر ڈیوائس پر بہت زیادہ ویڈیو دیکھنے والا ہے، اس کو چاہیے کہ وہ لمبی بڑی بیٹری والے موبائل خریدے۔

4۔ آپریٹنگ سسٹم:اس وقت دو آپریٹنگ سسٹم موجود ہیں، ایک ہے آئی او ایس، جو ایپل ڈیوائسز کے لیے ہے اور دوسرا ہے اینڈرائیڈ جو دوسری مسابقتی ڈیوائسز میں استعمال ہوتا ہے، اہم بات یہ بھی ہے کہ کمپنیاں مزید فیچرز ڈالنے کے لیے اینڈرائیڈ سسٹم میں تبدیلیاں بھی کرتی رہتی ہیں۔

5۔ پروسیسر:زیادہ استعمال رکھنے والے صارفین کے لیے بہتر ہے کہ فون کوالکم اسنیپ ڈریگن 652 اور اسنیپ ڈریگن 820 اور 821 کا پروسیسر رکھتا ہو جبکہ عام صارفین وہ فون بھی استعمال کر سکتے ہیں جو میڈیا ٹیک پروسیسر کے ساتھ آتے ہیں۔

Adsence 300X250


News Source   News Source Text

WATCH LIVE NEWS

مزید خبریں
سائنس اور ٹیکنالوجی
مزید خبریں

Meta Urdu News: This news section is a part of the largest Urdu News aggregator that provides access to over 15 leading sources of Urdu News and search facility of archived news since 2008.