انتشار میں

Poet: درخشندہ
By: Darakhshanda, Huston

تیرے اختیار میں نہ میرے اختیار میں
ہے مگر زندگی کی لہریں انتشار میں

گزر رہے ہیں شب و روز اس انتظار میں
کون جانے کب تلک رہیں اس حصار میں

مگر رکھیۓ اللہ سے ہی امید قائم ہر حال میں
ہونگی انشا اللہ دعائیں قبول اللہ کے دربار میں


 

Rate it:
14 Mar, 2021

More General Poetry

POPULAR POETRIES

FAMOUS POETS
About the Author: Darakhshanda
Penning my thoughts on life through poetic expression. All praise is for God who blessed me the ability to write.

.. View More
Visit 174 Other Poetries by Darakhshanda »