آؤ اک خواب بنیں

Poet: Azra Faiz
By: Azra Faiz, wah

آؤ اک خواب بنیں
جاگتی آنکھوں سے
اک دنیا آباد کریں
جہاں عورت کی بادشاہت ہو
آذاد اس کی چاہت ہو
جہاں اس کے پیدا ہونے پہ
بشاش ہر اک ساعت ہو
آؤ اک خواب بنیں
لوٹ لیں مردوں سے ان کی دنیا
بدل دیں ان کی سانسوں کو اپنے جیون سے
پھر پوچھیں کہ زندہ کیسے ہو
چھین کر ان سے ان کی طاقت کو
اپنی طاقت کو آزمایا کریں
آؤ اک خواب بنیں
جہاں معتبر ہو اپنی شخصیت
جہاں آزاد فیصلے جنم لے لیں
جہاں قید تو وہی ہو پر
قیدی سب بدل جائیں
آؤ اک خواب بنیں
بدل کر مردوں کی زندگی خود سے
پھر پوچھیں کہ حال کیسا ہے
آہیں چیخوں کی جگہ لے لیں جب
آنسو خون میں بدل جائیں جب
پھر پوچھیں کہ درد کیسا ہے
مرد کے مردہ احساس کو زندہ کریں
آؤ اک خواب بنیں
ایسی دنیا بسائیں آخر میں
فرق سب مٹائیں آخر میں
کوئی مظلوم اب نہ ظالم ہو
عورت بھی مرد کے برابر ہو
آؤ اک خواب بنیں
آؤ اک خواب بنیں

Rate it:
02 Oct, 2019

More General Poetry

POPULAR POETRIES

FAMOUS POETS

About the Author: Azra Faiz
Visit 3 Other Poetries by Azra Faiz »
Currently, no details found about the poet. If you are the poet, Please update or create your Profile here >>

Reviews & Comments

It is the voice of almost all the women and We all know that women of Pakistan are depressed by the cruel man of Pakistan , we all must raise the voice in favour of women .

By: Ishfaq, Wah on Oct, 10 2019

Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City
Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City