تمہیں بھولے نہیں ہیں ہم۔۔۔ ( اے پی ایس پشاور کے ننھے شہیدوں کے نام)

Poet: Muneeza Waseem
By: Muneeza Waseem, Karachi

وطن کے ہر حوالے میں
اندھیرے میں اجالے میں
کسی ماں کی کھلی چوکھٹ پہ لگے
دعاؤں کے تالے میں
کسی والد کے روشن خواب
امیدوں کے ہالے میں
نہیں! غم ہوسکے نا کم
تمہیں بھولے نہیں ہیں ہم

دسمبر جب بھی آتا ہے تو
یادیں لوٹ آتی ہیں
کسی اسکول کی گھنٹی بجے تو
ْآنکھیں بھیگ جاتی ہیں
میرا بیٹا،میرا بیٹا۔۔۔کی آوازیں
یہ آوازیں ستاتی ہیں
یہ یادیں کیسے ہوں مدھم
تمہیں بھولے نہیں ہیں ہم
تمہیں بھولے نہیں ہیں ہم

اے جنت کے مکینوں! جانتے ہو تم؟
تمہاری ماں کی آنکھیں
آج ہیں بے خواب اور پرنم۔۔۔
تمہارے باپ کے کاندھے میں
اب باقی نہیں ہے دم
تمہیں بھولے نہیں ہیں ہم
 

Rate it:
16 Dec, 2019

More General Poetry

POPULAR POETRIES

FAMOUS POETS

About the Author: Muneeza Waseem
Currently, no details found about the poet. If you are the poet, Please update or create your Profile here >>

Reviews & Comments

Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City
Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City