حساب میں کم ہوے

Poet: درخشندہ
By: Darakhshanda, Huston

حصول و حاصل برباد ہوئے
چاہت جہاں میں خوار ہوئے

کچھ ما سوا خواہشِ نفس ہوئے
باقی ماندہ یوم رب کے نام ہوئے

یوں امانت میں خیانت ہوئی
ہاۓ پشیمانی ایام عبادت کم ہوئے

تھی جس کی حیات دی ہوئی
اُسی کے لیے دن حساب میں کم ہوئے

 

Rate it:
14 Mar, 2021

More General Poetry

POPULAR POETRIES

FAMOUS POETS
About the Author: Darakhshanda
Penning my thoughts on life through poetic expression. All praise is for God who blessed me the ability to write.

.. View More
Visit 174 Other Poetries by Darakhshanda »