طوفان

Poet: ام بلال ریاض
By: ام بلال, Riyadh

رو اسطرح کہ گرے دل پر جاکر آنسو
دھل جائیں وہ گناہ جو دل پر لگے تھے

غفلتوں کی نیندیں کب تک طاری رھیں گی ھم پر
جو پہلے نہیں جاگے وہ بعد میں روئے تھے

اگر ٹھوکروں سے بھی ھمیں چلنے کا سلیقہ نہ آئے گا
تو پھر وھیں گریں گے جہاں پہلے گرے تھے

قدرت نے آج ھم کو دکھایا ھے یہ تماشا
آج انکا نہیں کوئ مول جنکے ھاتھوں ھم بکے تھے

اس طوفان نے ھمیں کیوں کر دیا ھے اسطرح بے بس
رب کو چھوڑ کر کیوں مخلوق کے آگے جھکے تھے

Rate it:
04 May, 2020

More General Poetry

POPULAR POETRIES

FAMOUS POETS

About the Author: ام بلال
Visit 5 Other Poetries by ام بلال »
Currently, no details found about the poet. If you are the poet, Please update or create your Profile here >>

Reviews & Comments

Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City
Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City