وطن عزیز ہندوستان کے موجودہ حالات کے تناظر میں

Poet: Shameem Irfani ( شمیم عرفانی )
By: shameem irfani, Afif, Saudi Arab

میں نے یہ سمجھا تھا ، میرا ہمزباں ہوجائیگا
کیا خبر تھی وہ بھی مجھ سے بد گماں ہوجائیگا

شہر میں فرقہ پرستی آگ برساتی رہی
رہنما کہتے رہے ، امن و اماں ہو جائیگا

کیب اور این آر سی کا، لا کے وہ باطل نظام
سوچتا ہے کہ وہ حق کا ترجماں ہوجائیگا

موسم گل پر تو مالی! اس قدر نازاں نہ ہو
موسم گل بھی کبھی نذر خزاں ہو جائیگا

یونہی تم سوتے رہے اب بھی ، تو اے اہل وطن
اپنا ہندوستان ، بے نام و نشاں ہوجائیگا

رہ نورد شوق! تنہائی سے گھبراتا ہے کیوں؟
دیکھنا ایک روز تو ہی کارواں ہوجائیگا

کمر ہمت باندھ اور ہوش و خرد سے کام لے
دیکھ! کیسے مہرباں ، رب جہاں ہوجائیگا

مجھ کو اے پیر فلک! چشم حقارت سے نہ دیکھ
ذرہء خاکی بھی اک دن ، آسماں ہوجائیگا

جس نے خود میرے نشیمن کو جلایا ہو شمیم!
کیسے کہدوں کہ وہ مجھ پر مہرباں ہوجائیگا

Rate it:
16 Jan, 2020

More General Poetry

POPULAR POETRIES

FAMOUS POETS

About the Author: shameem irfani
Visit Other Poetries by shameem irfani »
Currently, no details found about the poet. If you are the poet, Please update or create your Profile here >>

Reviews & Comments

Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City
Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City