کہاں جاکے کون رہتا ہے

Poet: درخشندہ
By: Darakhshanda, Huston

لمحہ با لمحہ بیقراری کا سما بڑھ رہا ہے
بنا آگ لگے ہی دھواں سا ا ٹھ رہا ہے

زمیں سمٹ رہی ہے یا آسماں پھیل رہا ہے
گناہوں کا بوجھ ا پنےکچھ اور بڑھ رہا ہے

اب اٹھتا قدم مریخ کی جانب بڑھ رہا ہے
اک نیا جہاں آباد کرنے کو انسا ن مچل رہا ہے

کون جانے اب کدھر جا کے طوفان رکتا ہے
اب دیکھیۓ کب کہاں جا کے کون رہتا ہے
 

Rate it:
09 Mar, 2021

More General Poetry

POPULAR POETRIES

FAMOUS POETS
About the Author: Darakhshanda
Penning my thoughts on life through poetic expression. All praise is for God who blessed me the ability to write.

.. View More
Visit 174 Other Poetries by Darakhshanda »