ہم خوش نہیں ہیں

Poet: UA
By: UA, Lahore

ہم خوش نہیں ہیں
ہم بہت اداس ہیں
صبح کے نظاروں سے
پرندوں کی چہکاروں سے
بارش کی بھواروں سے
محروم ہو کر رہ گئے ہیں
ہم خوش نہیں ہیں
ہم بہت اداس ہیں
آسمان، بادل، سے
سورج، چاند، ستاروں سے
سبزے، پھول، بہاروں سے
سبھی دِلکش نظاروں سے
محروم ہو کر رہ گئے ہیں
ہم خوش نہیں ہیں
ہم بہت اداس ہیں
یوں لگتا ہے کہ ہم
زندہ نہیں ہیں بلکہ
زندہ درگور ہو کے رہ گئے ہیں
ہم خوش نہیں ہیں
ہم بہت اداس ہیں
مہر ، سے وفا سے،
شوخ چنچل اشاروں سے
ملاقات سے، دیدار سے
اپنے پیاروں کے
اس گلی سے جا کے
محروم ہو گئے ہیں
مجبور ہو کر رہ گئے ہیں
ہم خوش نہیں ہیں
ہم بہت اداس ہیں

Rate it:
04 Jun, 2020

More General Poetry

POPULAR POETRIES

FAMOUS POETS

About the Author: uzma ahmad
sb sy pehly insan phr Musalman and then Pakistani
broad minded, friendly, want living just a normal simple happy and calm life.
tmam dunia mein amn
.. View More
Visit 3222 Other Poetries by uzma ahmad »

Reviews & Comments

Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City
Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City