یہ میری آخری التجاء ہےآپ سے

Poet: UA
By: UA, Lahore

یہ میری آخری التجاء ہےآپ سے
اِس کے بعد الودٰع ہے آپ سے
جو کہنا تھا سب کہہ چکے ہیں
جو تم نے کہا وہ سن چکے ہیں
ناممکن تو کچھ بھی نہ تھا
ممکن سب کچھ ہو سکتا تھا
جو چاہیں تو سب ممکن ہو
جو نا چاہیں تو ناممکن ہو
ہم آپ کے دِل کی جان گئے
یوں آپ کی باتیں مان گئے
بھولیں سے کبھی یاد آئیں تو
یادیں مجھے دہرائیں تو
اپنی یادوں میں آپ ہمیں یاد ذرا سا کر لینا
میرے ویرانے نے دِل آباد ذرا سا کر لینا
اور کچھ نہیں چاہنا ہے آپ سے
اور کچھ نہیں کہنا ہے آپ سے
یہ میری آخری التجاء ہےآپ سے
اِس کے بعد الودٰع ہے آپ سے

Rate it:
08 Mar, 2020

More General Poetry

POPULAR POETRIES

FAMOUS POETS

About the Author: uzma ahmad
sb sy pehly insan phr Musalman and then Pakistani
broad minded, friendly, want living just a normal simple happy and calm life.
tmam dunia mein amn
.. View More
Visit 3206 Other Poetries by uzma ahmad »

Reviews & Comments

Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City
Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City