یہ پیار بھرے رستے ہموار نہ تھے اتنے

Poet: Naveed Ahmed Shakir
By: Naveed Shakir, Faisalabad

یہ پیار بھرے رستے ہموار نہ تھے اتنے
ملنے کے ترےہم کو آثار نہ تھے اتنے

احساس تجھے ہوتا تو پاس مرے ہوتا
ہم تیری محبت سے سرشار نہ تھے اتنے

منزل کوئی مل ہی جاتی ساتھ ترا ہوتا
جو لوگ ملے ہم کو درکار نہ تھے اتنے

اک میری تمناتھی اک تیری انا تھی بس
منظور ہمیں سب تھا انکار نہ تھے اتنے

اس پیار میں ہم جو قائل جھوٹ کے ہوتے تو
ہم جیت ہی لیتے پر فنکار نہ تھے اتنے

اب بس ہو گئی شاکر میری غموں سے لڑتے
بیزار ہیں جتنے اب بیزار نہ تھے اتنے

Rate it:
11 Jun, 2020

More Sad Poetry

POPULAR POETRIES

FAMOUS POETS

About the Author: Naveed Shakir
Do Poetry and like poetry.. View More
Visit 45 Other Poetries by Naveed Shakir »

Reviews & Comments

Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City
Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City