وطن کی ساکھ !!!

Poet: Asad
By: Asad, mpk

سوئے ہوئے ضمیرون کو جگانے کا وقت ھے
وطن کے لئے اپنی جان لٹانے کا وقت ھے

چلو اٹھ نکلو اپنی قضائون کی جانب
کہ سجدون سے اپنے ایمان بچانے کا وقت ھے

کب تک سوئے رہو گے خواب خرگوش میں
کہ جاگ اٹھو کہ حقیقت میں آنے کا وقت ھے

اس سے پہلے کہ پانی سروں سے گزر جائے
کس لو کمر کو اپنی کہ اکتانے کا وقت ھے

آج نہیں چلو کل سہی کرنا تو ھے آخر
نکل پڑو ابھی سے نہین سستانے کا وقت ھے

تیرے بچے میرے بچے کب تک یہ چلے گا
یک مشت ہو کہ نہیں پریچے کرانے کا وقت ھے

وقت کی تلوار سے آخر سامنا تو ہو گا
اٹھ سینہ تان کہ کے خون بہانے کا وقت ھے

اسد جان سے بڑھ کر وطن کی ساکھ ھے۔۔
دیکھ آن پڑی ھے اس پر اب بچانے کا وقت ھے

Rate it:
18 Dec, 2019

More General Poetry

POPULAR POETRIES

FAMOUS POETS

About the Author: Asad
Visit 357 Other Poetries by Asad »
Currently, no details found about the poet. If you are the poet, Please update or create your Profile here >>

Reviews & Comments

Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City
Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City