پانچ سالہ بچے نے بہن اور کتے کو آگ میں جلنے سے بچالیا

جورجیا  کے شہر بارٹو کاؤنٹی سے تعلق رکھنے والے پانچ سالہ نوح نے بڑی بہادری سے گھر میں آگ لگنے کے باعث اپنی 2  سالہ بہن اور ایک پالتو کتے  کو بچا لیا۔

تفصیلات کے مطابق نوح کے بیڈ روم میں صبح سویرے آگ بھڑک اٹھی۔ لیکن وہ گھبرایا نہیں، اور اس کے اقدامات سے پورے خاندان کو بچانے میں مدد ملی۔

نوح خاندان کے ان آٹھ افراد میں سے ایک ہے، جو اتوار کے روز جارجیا کے شہر بارٹو کاؤنٹی میں اپنے گھر میں سو رہے تھے۔ جب وہ سو کے اٹھے    تو   کمرے میں دھواں اور شعلے   اٹھ رہے  تھے۔ جہاں اس کی چھوٹی  بہن بھی موجود تھی۔

  اس نے بستر سے چھلانگ لگائی، اپنی بہن کو پکڑ لیا اور کھلی کھڑکی سے گھر سے باہر نکل گیا۔ کیوں کہ ایک وہی واحد رستہ  تھا۔ لیکن نوح اپنی بہن کو باہرچھوڑ کر واپس گھرکے اند ر چلا گیا کیوں کہ وہ اپنے پالتو کتے کو بچانا چاہتا تھا، اور خوش قسمتی سے وہ اس کتے کو باہر لے آیا۔

  نوح  پھرمدد کے لئے اپنے انکل کے گھر کی طرف بھاگا۔ نوح اور اس کے انکل نے گھر کے باقی افراد کو اس واقعہ سے آگاہ  کیا۔ اور سب کو باحفاظت گھر سے باہرنکالنے میں مدد کی۔

بارٹو کاؤنٹی فائرڈیپارٹمنٹ کے چیف ڈوین جیمیسن نے اپنے بیان میں کہا کہ، “ہم نے پہلے بھی بچوں کو اپنے کنبے کو اس طرح کے  واقعات  سے آگاہ کرتے دیکھا ہے۔ “لیکن ایک 5 سالہ بچے کا ایسا کرنا، یہ کافی غیر معمولی ہے۔”

نوح ووڈس کو اعزازی فائر فائٹر کے نام سے منسوب کیا جارہا ہے اور اسے اس کی بہادری کے لئے ایک نایاب لائف سیور ایوارڈ سے نوازا گیا۔

جیمیسن نے بتایا کہ آگ نوح کے بیڈروم شارٹ سرکٹ کے باعث لگی۔ جب فائر فائٹرز پہنچے تو انہوں نے نوح اور کنبہ کے چار دیگر افراد کو  معمولی جلنے  کی وجہ سے طبی امداد دی۔

اس موقع پر نوح کے دادا کا کہنا تھا کہ  خدا کا شکر ہے  ہماری  فیملی کے سارے کے سارے افراد گھر سے  نکلنے میں کامیاب رہے۔ اور اگر نوح کو پتہ نہ  چلتا تو شاید ہم آج زندہ  نہ ہوتے۔

یہاں تک کہ جارجیا کے گورنمنٹ برائن کیمپ نے نوح کے بہادر اقدامات کے بارے میں سنا۔ اور نوح کی اس بہادری  کو خوب سراہا۔  اور کہا کہ  یقین نہیں  آرہا کے 5 سالہ  بچا  ہیرو بھی  ہوسکتا ہے۔


 

WATCH LIVE NEWS

Samaa News TV PTV News Live Express News Live 92 NEWS HD LIVE Pakistan TV Channels

Meta Urdu News: This news section is a part of the largest Urdu News aggregator that provides access to over 15 leading sources of Urdu News and search facility of archived news since 2008.