ہماری اپنی فوج کافی ہے،آذربائیجان کا ایران کے بیان پر ردعمل

image

آذربائیجان کی وزارت خارجہ کی ترجمان لیلا عبداللہیفا نے ایرانی وزیر خارجہ امیر حسین عبداللہیان کے اس الزام کو بے بنیاد قرار دے دیا جس میں انہوں نے کہا تھا کہ آذربائیجان متنازعہ علاقے میں جنگجو اور دہشت گرد جمع کررہا ہے۔

ایرانی وزیر خارجہ نے آذربائیجان  پر الزام عائد کیا تھا کہ گزشتہ موسم خزاں میں جنگ کے دوران نگورنو کاراباخ علاقے میں اس کی طرف سے کرائے کے فوجی اور دہشت گرد لائے گئے تھے۔

ترجمان کے مطابق آذربائیجان کے صدر الہام علیوف نے کہا ہے کہ انہیں کرائے کے فوجیوں کی ضرورت نہیں ہے کیوں کہ ان کی اپنی ایک لاکھ سے زیادہ فوج موجود ہے۔

آذربائیجان کی وزارت خارجہ کی ترجمان نے ایرانی وزیر پرسخت تنقید کرتے ہوئے ان سے مطالبہ کیا کہ وہ آذربائیجان کے خلاف بے جا الزام تراشی اور بہتان لگانے کا سلسلہ بند کریں۔

انہوں نے کہا کہ یہ بے بنیاد الزامات آذربائیجان کی سرزمین میں ایرانی ٹرکوں کے غیر قانونی داخلے کو روکنے اور آذربائیجان کی اپنی اراضی قبضے سے چھڑانے کی وجہ سے عائد کیے جارہے ہیں۔

آذربائیجان کی وزارت خارجہ کے ترجمان نے کہا کہ جو لوگ دہشت گردوں کو تلاش کرنا چاہتے ہیں ان کے لیے ہمارا مشورہ یہ ہے کہ وہ اپنے ارد گرد دیکھیں۔

واضح رہے کہ گزشتہ دنوں آذربائیجان کی سرحد پر ایرانی مشقوں کے باعث تہران اور باکو کے درمیان اختلافات سامنے آئے تھے۔


News Source   News Source Text

WATCH LIVE NEWS

مزید خبریں

Meta Urdu News: This news section is a part of the largest Urdu News aggregator that provides access to over 15 leading sources of Urdu News and search facility of archived news since 2008.