کورونا اور ڈینگی کی علامات میں کیا فرق ہے؟

image

یہ تو ہم سب ہی جانتے ہیں کہ گزشتہ سال سے اب تک کورونا کا ڈر لوگوں کے دلوں میں بیٹھا ہوا ہے لیکن اب ڈینگی بھی سر اٹھانے لگا ہے جس کے باعث ہلاکتوں میں اضافہ بھی ریکارڈ کیا گیا ہے۔

کورونا اور ڈینگی کے دوران سامنے آنے والی علامات میں زیادہ فرق نہیں کیونکہ ان دونوں بیماریوں میں انسان کو شدید بخار بھی ہوتا ہے اور جسم میں درد بڑھ جاتا ہے۔

لیکن ماہرین نے ان دونوں کے درمیان فرق کرنے والی علامات کے حوالے سے ضرو بتایا ہے۔

اس حوالے سے ماہرین کا کہنا ہے کہ  دیگر علامات کے ساتھ سانس لینے میں مشکلات، سینے میں تکلیف اور سانس کے مسائل کا سامنا ہو تو یہ نشانیاں کووڈ 19 کی ہوسکتی ہیں، ڈینگی کے مریضوں کو ان کا سامنا نہیں ہوتا ہے۔

 اگر بیماری کی ابتدائی علامات کمزور اور سردرد ہیں تو زیادہ امکان یہ ہے کہ وہ ڈینگی کی ہوں گی۔

اسی طرح اگر نظام ہاضمہ کی علامات جیسے متلی اور ہیضہ کا سامنا ہوتا ہے تو یہ بھی ڈینگی مریضوں میں زیادہ عام ہوتی ہیں۔

اسکے علاوہ اگر گھر کے ایک سے زیادہ افراد میں علامات نمودار ہوں تو زیادہ امکان یہی ہوگا کہ انہیں کووڈ 19 کا سامنا ہے جو متعدی مرض ہے جبکہ ڈینگی متعدی بیماری نہیں۔

Adsence 300X250


News Source   News Source Text

WATCH LIVE NEWS

مزید خبریں
خبریں
مزید خبریں

Meta Urdu News: This news section is a part of the largest Urdu News aggregator that provides access to over 15 leading sources of Urdu News and search facility of archived news since 2008.