اتنا لیٹ نہ ہوجائے کہ ہم یا کوئی اور آ کر بھی ملک سنبھال نہ سکے، شہباز گل کا انتباہ

image

اسلام آباد: چیئرمین پاکستان تحریک انصاف عمران خان کے چیف آف اسٹاف شہباز گل نے کہا ہے کہ ثابت ہو گیا کہ یہ نالائق اور کرپٹ ہیں، نیب کے تابوت میں آخری کیل ٹھونک دی ہے۔

ہم نیوز کے پروگرام ’ہم مہر بخاری کے ساتھ‘ میں گفتگو کرتے ہوئے شہباز گل نے کہا کہ ان سے نہ گیس سنبھالی جا رہی نہ ہی بجلی، کہتے ہیں آئی ایم ایف سے معاہدہ عمران خان کر کے گیا تھا، اگر عمران خان نے معاہدہ کیا تھا تو عمران خان کو کرنے دیتے۔

انہوں ںے دعویٰ کیا کہ ان کی گاڑی کے ساتھ حادثہ کروایا گیا،عمران خان وزیراعظم تھے تب سے یہ سارا معاملہ شروع کیا گیا، یہ پوری قوم کے سامنے سیاسی طور پر ننگے ہوچکے ہیں، ان کے پاس اب بھاگنے کا کوئی راستہ نہیں ہے۔

شہباز گل نے کہا کہ ہمارا مسئلہ ان سے نہیں بیرونی سازش سے ہے، ہم امریکہ سے جنگ کرنا نہیں چاہتے ہیں۔

سابق وزیراعظم کے چیف آف اسٹاف شہباز گل نے کہا کہ انہوں نے ملک کو تباہ کر دینا ہے، ڈیزل کی قیمت بڑھا کر کسانوں کو تباہ کردیا، ایگریکلچر کا انہوں نے ستیاناس کر دیا ہے۔

انہوں نے خبردار کرتے ہوئے کہا کہ اتنا لیٹ نہ ہوجائے کہ ہم یا کوئی اور آکر بھی ملک کو سنبھال نہ سکے، ہماری حکومت میں 6 فیصد گروتھ تھی۔

ہم نیوز کے پروگرام ہم مہر بخاری کے ساتھ میں شریک دوسرے مہمان رکن قومی اسمبلی عبدالقادر مندوخیل نے سوالات کے جوابات دیتے ہوئے کہا کہ پیپلز پارٹی کہتی ہے کہ جمہوریت چلنی چاہئے، 2018 کے الیکشن میں 155 پی ٹی آئی کے ممبران تھے، 2018کے الیکشن میں موجودہ حکومت کے 162 ممبران تھے۔

پاکستان پیپلزپارٹی سے تعلق رکھنے والے ممتاز قانون دان عبدالقادر مندوخیل نے استفسارکیا کہ 17 ممبران ان کو کس نے لا کے دیئے؟ کس ملک نے سازش کی تھی؟

انہوں نے کہا کہ کبھی ہم نے اس طرح کی طوفان بدتمیزی نہیں دیکھی، اس شخص نے سپریم کورٹ کو چھوڑا نہ ہی آرمی چیف کو، یہ پہلے دھمکا رہا ہے، پھر ادارو ں کے پاؤں پڑ رہا ہے، شہباز گل تو کونسلر بننے کے بھی لائق نہیں ہے۔

عمران کے ساتھ ہونے پر دوست خفا ہیں تو معذرت خواہ ہوں، اداروں سے صلح ہونی چاہیے، ایم کیو ایم نے 3مرتبہ تھوکا، شیخ رشید

ہم نیوز کے پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے عبدالقادر مندو خیل نے الزام عائد کیا کہ سپریم کورٹ کے خلاف انہوں نے باقاعدہ ٹرینڈ چلایا۔ انہوں نے استفسار کیا کہ کیا اس سے پہلے انہوں نے پیکا آرڈیننس نہیں لایا تھا؟


News Source   News Source Text

مزید خبریں
تازہ ترین خبریں
مزید خبریں

Meta Urdu News: This news section is a part of the largest Urdu News aggregator that provides access to over 15 leading sources of Urdu News and search facility of archived news since 2008.