پاکستان اور برطانیہ کے درمیان مجرموں کی واپسی کا معاہدہ طے پا گیا

image
پاکستان اور برطانیہ کے درمیان مجرموں اور امیگریشن قوانین کی خلاف ورزی کرنے والوں کی واپسی کے معاہدے پر دستخط ہوگئے ہیں۔

برطانوی وزیرداخلہ پریتی پٹیل نے بدھ کو ٹوئٹر پر لکھا کہ ’مجھے فخر ہے کہ میں نے اپنے پاکستانی دوستوں کے ساتھ  مجرموں اور امیگریشن قوانین کی خلاف ورزی کرنے والوں کی واپسی کے لیے اہم معاہدے پر دستخط کیے۔‘

ان کا مزید کہنا تھا کہ ’معاہدے سے ظاہر ہوتا ہے کہ امیگریشن کے حوالے سے ہمارے نئے پلان عمل درآمد شروع ہوگیا ہے۔‘

خیال رپے رواں سال جنوری میں برطانیہ کے ساتھ مجرموں کی تحویل کے معاہدے کے حوالے سے بنائی گئی خصوصی کمیٹی نے کہا تھا کہ برطانیہ کے ساتھ مجرموں کی واپسی کے معاہدے پر بہترین عوامی مفاد میں دستخط کیے جائیں گے۔

17 جنوری کو ہونے والے کمیٹی کے اجلاس میں فیصلہ کیا گیا تھا کہ برطانیہ کے ساتھ مجرموں کی واپسی کے معاہدے پر بہترین عوامی مفاد میں دستخط کیے جائیں گے، معاہدے کو وفاقی کابینہ میں لے جانے سے پہلے برطانیہ سے مزید مشاورت کی جائے گی، برطانیہ سے مشاورت کے بعد معاہدے کو وفاقی کابینہ سے حتمی منظوری کے لیے پیش کیا جائے گا۔

BREAKING:

I'm proud to have signed a new landmark agreement with our Pakistani friends to return foreign criminals and immigration offenders from the UK to Pakistan.

This deal shows our #NewPlanForImmigration in action, as we deliver for the British people. pic.twitter.com/UBK7gZ7Z9X

— Priti Patel (@pritipatel) August 17, 2022

معاہدے سے پاکستان اور برطانیہ اپنے سزا یافتہ مجرموں کو ایک دوسرے کے ممالک واپس بھیج سکیں گے۔

 معاہدے سے صرف ایسے شہریوں کو واپس لانے کی اجازت ہوگی جن کو متعلقہ عدالتیں سزائیں سنا چکی ہیں۔

واضح رہے کہ مجرموں کی واپسی کے معاہدے سے متعلق مذاکرات کا پہلا راؤنڈ اکتوبر 2019 میں منعقد ہوا تھا۔


News Source   News Source Text

مزید خبریں
پاکستان کی خبریں
مزید خبریں

Meta Urdu News: This news section is a part of the largest Urdu News aggregator that provides access to over 15 leading sources of Urdu News and search facility of archived news since 2008.