تسکین لحد کی خاطر میں تیری محبت ساتھ لے کے جائوں گا

Poet: احسن فیاض
By: Ahsin Fayaz, Badin

تسکین لحد کی خاطر میں تیری محبت ساتھ لے کے جائوں گا
ﻣﺮﻭﮞ ﮔﺎ تو ﺗﯿﺮﯼ ﺗﺼﻮﯾﺮﯾﮟ ﺗﯿﺮﮮ ﺧﻂ ﺳﺎﺗﮫ ﻟﮯ کے ﺟﺎﺋﻮﮞ ﮔﺎ

تیری تاریک راتوں کا چراغ ہوں جلتا رہونگا یونہی
تجھے یہ ڈر کے بچھڑا تو رفاقت ﺳﺎﺗﮫ ﻟﮯ کے ﺟﺎﺋﻮﮞ ﮔﺎ

میں صدیوں کی بھوک کو لمحوں میں بانٹ لونگا
میں جو بھوکے پیٹ سوتا ہوں یہ عادت ﺳﺎﺗﮫ ﻟﮯ کے ﺟﺎﺋﻮﮞ ﮔﺎ

عذاب جہنم سے بڑھ کر بھی ایک سزا اور ہے جاناں
تیرے پہلو سے رخصت ہو کے اپنی عقوبت ﺳﺎﺗﮫ ﻟﮯ کے ﺟﺎﺋﻮﮞ ﮔﺎ

تم احسن اداس نہ ہو وہاں اذیت ہجر نہیں ہوتی
میں وصل، ہجر، ربط و روابط ﺳﺎﺗﮫ ﻟﮯ کے ﺟﺎﺋﻮﮞ ﮔﺎ

Rate it:
29 Aug, 2019

More Love / Romantic Poetry

POPULAR POETRIES

FAMOUS POETS

About the Author: Ahsin Fayaz
Visit 31 Other Poetries by Ahsin Fayaz »
Currently, no details found about the poet. If you are the poet, Please update or create your Profile here >>

Reviews & Comments

Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City
Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City