دل ابھی ٹوٹا نہ تھا کہ سوال اٹھ گئے۔

Poet: Asad
By: Asad, mpk

آ گے سے کچھ اور ہی وبال اٹھ گئے
دل ابھی ٹوٹا نہ تھا کہ سوال اٹھ گئے

تجلی انکے حسن کی دیکھی نہ گئی ہمسے
ہوش و خرد سب سارے بہر حال اٹھ گئے

ہمکو نہین معلوم تھا کہ تم بھی ہو موجود
خطا معاف کیجیئے جو بے خیال اٹھ گئے

ہنوز باقی رہ گئے عقل کے اندھے
جو معتبر تھے کبھی لوگ با کمال اٹھ گئے

ایک ہم رہ گئے زندھ اس جہان میں
وگرنہ ! تو اپنے ہم فہم ہم خیال اٹھ گئے

اسد باّغ میں بلبل شوریدھ ھے کیوں کر ؟
کوئی بتلا دو اسے کہ دن محال اٹھ گئے

Rate it:
10 Jun, 2020

More Love / Romantic Poetry

POPULAR POETRIES

FAMOUS POETS

About the Author: Asad
Visit 400 Other Poetries by Asad »
Currently, no details found about the poet. If you are the poet, Please update or create your Profile here >>

Reviews & Comments

Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City
Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City