رہنے دو

Poet: شفق
By: Shafaq, Lahore

یہ جو فاصلے ہیں ہمارے بیچ انہں رہنے دو
بات جہاں پر رکی ہے رکی رہنے دو
روک لو اپنے قدموں کو وہیں پر
ارمان دل کے دل میں رہنے دو
جو تم آگے بڑھے تو ہم بھی نہ رکیں گے
ہر حد ہو جاے گی ختم اور سوال اٹھیں گے
ہم میں نہیں حوصلہ کہ جواب دیں سکیں
اپنےتمہارے رشتے کو نام دیں سکیں
یہ دنیا نہیں اتنی بھلی کہ سب سمجھ جاے
دو پیار کرے والوں کو ملائے
آج تک سبھی عشق زادوں کے قصے عام ہوئے ہیں
کب کسی کو لیلہ ملی اور کب سسی پنوں ساتھ ہوئے ہیں
پتھر کے ہیں یہ لوگ اور چٹان سا ہے زمانہ
ان کے ہوتے کب دو دل ساتھ ہوئے ہیں

Rate it:
15 Oct, 2019

More Love / Romantic Poetry

POPULAR POETRIES

FAMOUS POETS

About the Author: Shafaq
Visit 28 Other Poetries by Shafaq »
Currently, no details found about the poet. If you are the poet, Please update or create your Profile here >>

Reviews & Comments

Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City
Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City