زندگی جب بوجھ بن جاتی ہے تو

Poet: وشمہ خان وشمہ
By: وشمہ خان وشمہ, ملایشیا

اشک پی کر مسکرا لیتے ہیں لوگ
درد سینے میں چھپا لیتے ہیں لوگ

زندگی جب بوجھ بن جاتی ہے تو
موت کو سینے لگا لیتے ہیں لوگ

اپنی خود داری کا رکھنے کو بھرم
آہ ہونٹوں میں دبا لیتے ہیں لوگ

زہر پیتے ہیں یہ آخر کس لیے
اپنی ہستی کیوں مٹا لیتے ہیں لوگ

خواب جو پورے نہیں ہوتے کبھی
اپنی آنکھوں میں سجا لیتے ہیں لوگ

جب بھلا ئی کر کے بھی کچھ نہ ملے
تو برا خود کو بنا لیتے ہیں لوگ

تلخیوں سے کر کے سمجھوتہ کبھی
ہر تمنا کو سلا لیتے ہیں لوگ

جب خوشی رہتی ہو ان سے اجنبی
غم کو ہی اپنا بنا لیتے ہیں لوگ

Rate it:
01 Aug, 2017

More Love / Romantic Poetry

POPULAR POETRIES

FAMOUS POETS
About the Author: وشمہ خان وشمہ
I am honest loyal.. View More
Visit 4712 Other Poetries by وشمہ خان وشمہ »

Reviews & Comments

Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City
Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City