ھم ادب کے دائرے سے کبھی باہر نہیں گئے

Poet: Asad
By: Asad, mpk

زانوں ہی رھے ان کے کبھی سر نہیں گئے
ھم ادب کے دائرے سے کبھی باہر نہیں گئے

بڑا زمانے نے کیا آہ ! ظلم و ستم ھم پر
کیا کیا اذئیتیں عشق میں سہہ کر نہیں گئے

تیرے آنسو دیکھ کر ادھر پگھل سا گیا دل
مگر پھر بھی حوصلہ رکھا رو کر نہیں گئے

پیار میں رسوائی کا تیرے کھٹکہ لگا رہا
رھے تھوڑے سے فکر مند پر ڈر نہین گئے

واعظ تیرے عشق نے ہمین پھرایا گلی گلی
اک تیری تلاش مین ھم کدھر نہیں گئے

یار کو اگر ھم سے نہیں کوئی سروکار تو پھر
ھم پر ھے کیا آن پڑی اگر ادھر نہیں گئے؟

Rate it:
23 Oct, 2019

More Love / Romantic Poetry

POPULAR POETRIES

FAMOUS POETS

About the Author: Asad
Visit 357 Other Poetries by Asad »
Currently, no details found about the poet. If you are the poet, Please update or create your Profile here >>

Reviews & Comments

Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City
Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City