یاد سینے سے لگا کر میں چلی آئی ہوں

Poet: وشمہ خان وشمہ
By: وشمہ خان وشمہ, ROMANIA

یاد سینے سے لگا کر میں چلی آئی ہوں
تیرے دکھ درد نبھا کر میں چلی آئی ہوں

تُو نے جس راہ پہ لا کرمجھےچھوڑا تھا وہاں سے
لاش خوداپنی اُٹھا کر میں چلی آئی ہوں

سو گیا تھا تُو شب وصل مرے پاس وہاں
صبح ِ دم تجھ کو جگا کر میں چلی آئی ہوں

پڑ گیا وقت جو مشکل تو پکارا تُو نے
تیری تقدیر بنا کرمیں چلی آئی ہوں

دیکھ کر غیروں کے انداز تری محفل میں
راز وشمہ کو بتا کر میں چلی آئی ہوں

Rate it:
04 Nov, 2013

More Love / Romantic Poetry

POPULAR POETRIES

FAMOUS POETS
About the Author: وشمہ خان وشمہ
Visit 76 Other Poetries by وشمہ خان وشمہ »
Currently, no details found about the poet. If you are the poet, Please update or create your Profile here >>

Reviews & Comments

Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City
Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City