انڈین گلوکار سدھو موسے والا کا قاتل گرفتار، پولیس کا دعویٰ

image

انڈیا کے مشہور ریپ گلوکار اور کانگریس کے رہنما سدھو موسے والا کے مبینہ قاتل انکت سرسا کو گرفتار کر لیا گیا ہے۔

انڈین ٹی وی این ڈی ٹی وی کے مطابق پولیس نے کہا ہے کہ انکت سرسا گولی چلانے والوں میں مرکزی کردار ہے اور اس نے انتہائی قریب سے سدھو موسے والا پر فائرنگ کی تھی۔

اتوار کی رات کو 18 برس کے انکت سرسا کو پولیس نے دہلی کے بس اڈے سے گرفتار کیا تھا۔

پولیس کا کہنا ہے کہ وہ لارنس بشنوئی گینگ کے رکن ہیں۔

اس نے مبینہ طور پر سدھو موسے والا پر چھ گولیاں چلائیں۔ ان کے قریبی ساتھی سچن ورمانی کو بھی گرفتار کیا گیا ہے۔

29 مئی کو سدھو موسے والا کو پنجاب میں قتل کیا گیا تھا۔ ان کو 19 گولیاں لگی تھیں۔

دہلی پولیس کے ذرائع نے کہا ہے کہ انکت سرسا سدھو موسے والا کے قریب گئے۔ وہ اس وقت ڈرائیونگ کر رہے تھے جب انکت سرسا نے ان پر فائرنگ کی۔

متعدد تصاویر میں انکت سرسا نے کلاشنکوف سمیت مخلتف قسم کا اسلحہ اپنے پاس رکھا ہوا ہے۔

سدھو موسے والا کو قتل کرنے سے ایک دن قبل مبینہ طور پر انکت سرسا نے کینیڈا میں مقیم گینگسٹر گولڈی برار سے ہدایات حاصل کی تھیں۔

گولڈی برار لارنس بشنوئی کے قریبی ساتھی ہیں۔ گولڈی برار نے قتل کے فوراً بعد ایک فیس بک پوسٹ میں سدھو موسے والا کے قتل کی ذمہ داری قبول کی تھی۔


News Source   News Source Text

مزید خبریں
عالمی خبریں
مزید خبریں

Meta Urdu News: This news section is a part of the largest Urdu News aggregator that provides access to over 15 leading sources of Urdu News and search facility of archived news since 2008.