آغاز محبت

Poet: شفق
By: Shafaq, Lahore

آغاز محبت میں ہی سب لٹا بیٹھے تھے
آج اس کی محفل میں خالی ہاتھ بیٹھے تھے
بک رہی تھی اس کی محفل میں آج محبت
کیا دام لگاتے ہم کہ
ہم تو سب ہار کے بیٹھے تھے
خالی نگاہوں سے بوجھل دل سے دیکھ رہے تھے اس کو
جو ہمارا تھا آج اس کے دعوے دار بے شمار بیٹھے تھے
سب نچھاور کر دیا تھا جس کی ایک آواز پر
اس کی آواز سننے کو آج کان ترسے ہوے تھے
بے بسی پر اپنی رونا چاہتے تھے ہم
مگر جانے کیوں اپنے آنسو روک کے بیٹھے تھے
بے لوث محبت کی تلاش ہمیں وہاں تھی
جہاں سب محبت کے خریدار بیٹھے تھے
انھی میں ایک وہ بھی تھا
جس کی محبت میں ہم گرفتار تھے
کیا کہتے کس کو فریاد کرتے
قسمت کو دے کر الزام اپنی جگہ پر آ بیٹھے تھے

Rate it:
08 Dec, 2019

More Love / Romantic Poetry

POPULAR POETRIES

FAMOUS POETS

About the Author: Shafaq
Visit 61 Other Poetries by Shafaq »
Currently, no details found about the poet. If you are the poet, Please update or create your Profile here >>

Reviews & Comments

Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City
Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City