مخملی لہجہ

Poet: asad
By: asad, mpk

مخملی لہجے مین وہ ہم گفتار کر نے لگے
لگا یون جیسے وہ ہمسے ہین پیار کرنے لگے

اس کا ہر لفظ ادا ایک کہانی بول رہا تھا
وہ کانون مین ہمارے محبت کا رس گھول رہا تھا

اس کی جھکتی نظرین مین شرم کی لا لی تھی
اس کی ہر ادا سب سے نرالی تھی

حسن مین آپ اپنے گوہر و نایاب تھی
ہر ایک عاشق مذاج کا گو سنہرہ خواب تھی

ہم بھی اس پر فدا ہو گئے جی جان سے
تمام عمر کے لیئے اسد قربان سے

Rate it:
13 Jul, 2020

More Love / Romantic Poetry

POPULAR POETRIES

FAMOUS POETS

About the Author: asad
Visit 415 Other Poetries by asad »
Currently, no details found about the poet. If you are the poet, Please update or create your Profile here >>

Reviews & Comments

Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City
Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City