میرے اداس رهنے کا سبب تم تهے

Poet: Aamir joyia
By: AAMIR JOYIA, dubai

میرے اداس رهنے کا سبب تم تهے
جب جب دیکها زمانے نے تنہا مجهے
میری بے ساختہ
سرگوشیاں میں
شامل تم تھے
آئینوں میں بہی ملے
ہم گمشدہ خود سے
دیکہے جو سائے اپنے
وہاں بھی صرف تم تھے
میرے قصے کہانیوں میں
میری آوارگی کے بہانوں میں
ڈهلتی شاموں کے
پیغاموں میں
جلتے چراغوں کی آہوں میں
میری لاپتہ نیندوں کے
بکھرے خوابوں میں
کروٹوں کی یادوں سے
بے رحم عداوتوں میں
میری ہر بات میں
میری ہر رات میں
ملا جو شخص مجھ سے پہلے
میری زات میں
یقین مانو
~~~ عامر ~~~
فقط
وہ تم تھے
فقط
وہ تم تھے

Rate it:
20 Jun, 2013

More Love / Romantic Poetry

POPULAR POETRIES

FAMOUS POETS
About the Author: AAMIR JOYIA
My self
Aamir joyia
and my home town is sargodha but i m living at dubai since 2006 to till now
But i love to writes new poems and short poetri
.. View More
Visit 41 Other Poetries by AAMIR JOYIA »

Reviews & Comments

Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City
Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City