ہمارے دل میں ہی اک نا خدا تلاش کریں

Poet: وشمہ خان وشمہ
By: وشمہ خان وشمہ, ملایشیا

کسی کشش کے کیا سلسلہ تلاش کریں
ہمیں بھی آخرش اک دائرہ تلاش کریں

ابھی سے اچھا ہوا رات سو گیا ورنہ
کبھی تو ختم سفر رت جگا تلاش کریں

برہنہ تن بڑی گزری تھی زندگی اپنی
لباس ہم کو ہی ایسا جزا تلاش کریں

ہم اپنا دیدۂ بینا پہن کے نکلے تھے
سڑک کے بیچ کوئی حادثہ تلاش کریں

ہمارے پاؤں سے لپٹی ہوئی قیامت تھی
قدم قدم پہ کسی کی دعا تلاش کریں

ہم اپنے سامنے ہر لمحہ مرتے رہتے تھے
ہمارے دل میں ہی اک نا خدا تلاش کریں

تمام رات بلاتا رہا ہے اک تارہ
افق کے پار کوئی معجزہ تلاش کریں

کسی کے سامنے اٹھتی نظر تو بہہ نکلا
ہماری آنکھ میں کیا کیا ادا تلاش کریں

حصار شہر سے باہر نکل ہی آئے ہیں
کبھی ہمیں بھی یہ اک راستہ تلاش کریں

Rate it:
07 Mar, 2018

More Love / Romantic Poetry

POPULAR POETRIES

FAMOUS POETS
About the Author: وشمہ خان وشمہ
I am honest loyal.. View More
Visit 4713 Other Poetries by وشمہ خان وشمہ »

Reviews & Comments

Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City
Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City