جورو کا غلام کھڑوس شوہر سے بہتر ہے، یاسر حسین

پاکستانی شوبز انڈسٹری کے معروف اداکار یاسر حسین کا ماننا ہے کہ جورو کا غلام ہونا کھڑوس شوہر ہونے سے بہتر ہے۔

مزاحیہ اداکاری سے شہرت حاصل کرنے والے یاسر حسین جو کہ گزشتہ برس دسمبر میں ساتھی اداکارہ اقرا عزیز کے ساتھ رشتہ ازدواج سے منسلک ہوئے تھے اکثر کچھ نہ کچھ ایسا کرتے ہیں جس کی وجہ سے وہ خبروں کی زینت بنے رہتے ہیں۔

تفصیل پڑھیں: 

اس بار بھی یاسر نے ایک ایسی پوسٹ دی ہے جس پر کچھ لوگ تو انہیں سراہ رہے ہیں مگر کچھ انہیں شدید تنقید کا نشانہ بھی بنا رہے ہیں۔

یاسر حسین نے اقرا عزیز کے ساتھ ایک تصویر فوٹو اور ویڈیو شیئرنگ ایپلیکیشن (ایپ) انسٹاگرام پر شیئر کی اور اس کے ساتھ تحریر کیا کہ ’آپ کی بیوی خوش ہونی چاہیے باقی سب جائیں۔۔۔۔۔۔۔ جی ہاں بھاڑ میں‘۔

 

View this post on Instagram

 

aapki bivi khush honi chahiye bus baki sab jaen ………… jee han bharr mai 😜 #iqraazizhussain #yasirhussain #marriedlife #jorukaghulam #is #betterthan #kharoos #shoher

A post shared by Yasir Hussain (@yasir.hussain131) on Feb 17, 2020 at 1:34am PST

اس کیپشن کے ساتھ انہوں نے پیش ٹیگ بھی دیا جس پر خاص طور پر تنقید کی جارہی ہے۔

یاسر نے لکھا کہ جورو کا غلام ہونا کھڑوس شوہر ہونے سے بہتر ہے۔

انسٹاگرام صارفین اس قسم کی زبان کے استعمال پر یاسر حسین پر تنقید کر رہے ہیں۔ ایک صارف کا کہنا تھا کہ آپ کو بدتمیزی کے علاوہ کچھ کرنا نہیں آتا۔

تفصیل پڑھیں: 

دوسری جانب ان کے مداحوں نے یاسر کے خیالات کی تائید کرتے ہوئے لکھا کہ کاش تمام شوہر آپ کی طرح ہی سوچیں۔

ایک اور صارف نے لکھا کہ شوہر ہو تو آپ جیسا، جسے صرف بیوی کی خوشی کی پرواہ ہے اور کسی کی نہیں۔

انسٹاگرام پر ہی شیئر کی گئی ایک اور پوسٹ میں یاسر نے اپنی اہلیہ اقرا عزیز کو سراہتے ہوئے لکھا کہ ’اپنی مرحومہ ساس کی ساڑھی پہن کر آپ نے میرا دل جیت لیا، میں آپ سے بہت محبت کرتا ہوں۔

 

View this post on Instagram

 

apni marhooma saas ki Sari 🥻 pehen k aap ne mera dil jeet lia @iiqraaziz love you 😍 #iqraazizhussain #weddingdinner @shaffer.store pc @momal15

A post shared by Yasir Hussain (@yasir.hussain131) on Feb 16, 2020 at 10:30pm PST


 

WATCH LIVE NEWS

Samaa News TV PTV News Live Express News Live 92 NEWS HD LIVE Pakistan TV Channels

Meta Urdu News: This news section is a part of the largest Urdu News aggregator that provides access to over 15 leading sources of Urdu News and search facility of archived news since 2008.