اب دل میں وہ پہلی سی محبت نہیں دیکھ

Poet: وشمہ خان وشمہ
By: وشمہ خان وشمہ, منیلا

اب دل میں وہ پہلی سی محبت نہیں دیکھی
آنکھوں کے سمندر میں قیامت نہیں دیکھی

ذہنوں پہ ہیں چھائے ہوئے ابہام کے سائے
اور سامنے کچھ اس کی وضاحت نہیں دیکھی

تعبیر نظر آنے لگی خواب کی صورت
پر خواب میں پہلی سہ بشارت نہیں دیکھی

ہر آئینہ بے عکس ہوا جاتا ہے کیوں کہ
اس میں جو کہیں کوئی شباہت نہیں دیکھی

کیا جانے خفا ہم سے وہ کیوں رہتے ہیں اکثر
ہر چند کوئی ان میں عدادت نہیں دیکھی

گم گشتہ تعلق سہی، کچھ پاس تو رکھ لیں
پر لوگوں میں اتنی بھی مروت نہیں دیکھی

دن رات ترے عشق میں ہم غرق ہوئے ہیں
اور لب پہ کوئی حرفِ شکائت نہیں دیکھی

یہ عشق کے شعلے بھی عجب چیز ہیں وشمہ
اس دل میں وداؤں کی علامت نہیں دیکھی

Rate it:
30 Dec, 2020

More Love / Romantic Poetry

POPULAR POETRIES

FAMOUS POETS
About the Author: وشمہ خان وشمہ
I am honest loyal.. View More
Visit 4712 Other Poetries by وشمہ خان وشمہ »

Reviews & Comments

Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City
Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City