خامنہ ای نے ایرانی حملے کو

ایران کے سپریم لیڈر آیت اللہ علی خامنہ ای نے نماز جمعہ کے اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے عراق میں امریکی فوجی اڈوں پر حملوں پر تبصرہ کرتے ہوئے کہا یہ حملے امریکا پر'کاری ضرب' تھے۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق جامعہ تہران میں 8 سال بعد جمعہ کے اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ گذشتہ دو ہفتے ایران کے لیے غیر معمولی اہمیت کے حال رہے ہیں۔ پاسداران انقلاب کی سمندر پار کارروائیوں کی ذمہ دار تنظیم'القدس ملیشیا' کے سربراہ جنرل قاسم سلیمانی کی ہلاکت کے بعد کے ایام ایرانی عوام کے لیے پریشان کن اور تجربات سے بھرپور گذرے ہیں۔ آیت اللہ علی خامنہ ای کا کہنا تھا کہ جنرل قاسم سلیمانی کے جنازے میں لاکھوں کا مجمع اور پاسداران انقلاب کے عراق میں امریکی فوجی اڈوں پر حملے 'اللہ کی نشانیوں' میں شامل تھے۔

اس موقع پر ایرانی پاسداران انقلاب کے عہدیدار، حکومتی اہلکار، باسیج ملیشیا اور ایرانی شیعہ ملیشیائوں کے دیگر عناصر کی بڑی تعداد موجود تھی جنہوں نے خامنہ ای زندہ باد، امریکا، کفار، منافقین اور اسرائیل مردہ باد کے نعرے بھی لگائے۔

ایرانی سپریم لیڈر کا کہنا تھا کہ ایران تاریخ کے فیصلہ کن دور سے گذر رہا ہے۔ ہم نے دنیا کی متکبر ریاست کے منہ پر ایسا طمانچہ رسید کیا ہے جسے وہ ہمیشہ یاد رکھے گا۔

انہوں نے امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ اور وزیر خارجہ مائیک پومپیو کے اس بیان کی شدید مذمت کی جس میں انہوں نے قاسم سلیمانی کو دہشت گرد قرار دیا تھا۔ خامنہ ای نے کہا کہ امریکیوں نے ایک ایسے کمانڈر کو قتل کیا ہے جو انسداد دہشت گردی کے خلاف سب سے آگے تھے۔

ایرانی سپریم لیڈر نے قاسم سلیمانی کے قتل کو امریکا کا بزدلانہ حملہ قرار دیا اور کہا کہ امریکی صدر نے قاسم سلیمانی کے قتل کا اعتراف کر کے دہشت گردی کا اعتراف کیا ہے۔

انہوں نے کہا کہ پاسداران انقلاب کی طرف سے امریکی فوجی اڈوں پر حملہ مناسب اور برمحل تھا۔ یہ حملہ نہ صرف امریکا کی عسکری بالادستی پر کاری ضرب تھا بلکہ اس نے امریکا کی دہشت بھی خاک میں ملا دی۔

آیت اللہ علی خامنہ نے کہا کہ امریکا عراق اور شام میں فوجیں جمع کرنے کا مقصد ایران کا گھیرا تنگ کرنا ہے۔ یہ امریکا کے بہادر سپاہی ہیں جنہوں نے خطے میں امریکا کے غلبے اور اس کی توسیع پسندی کو روک رکھا ہے۔

آیت اللہ علی خامنہ ای نے اپنے جمعہ کے خطاب میں حکومت کے خلاف احتجاج کرنے اور مظاہرے کرنے والوں کو تنقید کا نشانہ بنایا اور کہا کہ ہمارے خلاف نعرے لگانے والے ایران کے خیر خواہ نہیں ہو سکتے۔


 

WATCH LIVE NEWS

Samaa News TV PTV News Live Express News Live 92 NEWS HD LIVE Pakistan TV Channels

Meta Urdu News: This news section is a part of the largest Urdu News aggregator that provides access to over 15 leading sources of Urdu News and search facility of archived news since 2008.