’قومی شیرنی‘ کے انتقال پر انڈیا میں سوگ ’وہ ایک سلیبرٹی تھی‘

image
انڈیا میں جانوروں سے محبت کرنے والے قومی سطح پر شناخت رکھنے والی اس مشہور شیرنی کے انتقال پر سوگ کی کیفیت میں ہیں، جس نے معدومی کے خطرے سے دوچار اپنی نسل کو جنگل میں بڑھانے میں اہم کردار ادا کیا تھا۔

فرانسیسی خبر رساں ادارے اے ایف پی نے مقامی میڈیا کا حوالہ دیتے ہوئے بتایا ہے کہ مقامی طور پر ’کالر والی‘ کے نام سے مشہور شیرنی کو ’سپر موم‘ کے طور پر بھی بہت شہرت ملی، کیونکہ اس نے 30 بچوں کو جنم دیا تھا وہ اتوار کو آنتوں کی بیماری کے باعث دم توڑ گئی تھی۔

دُکھی حکام شیرنی کی لاش کو پھولوں سے لدے جنازے کی شکل میں تدفین کے لیے لے کر گئے۔

 جنگلی حیات کے تحفظ کے لیے کام کرنے والے ادارے کے فیلڈ ڈائریکٹر الوک مشرا نے اے ایف پی کو بتایا کہ ’شیرنی مقامی لوگوں میں اور ادارے میں بہت مشہور تھی، اور ہر کوئی اس کے بارے میں جانتا تھا، وہ ایک سلیبرٹی تھی۔‘

شیرنی کو اس قدر شہرت اسی لیے ملی کہ اس نے مقامی شیروں کی نسل پیدا کرنے اور جوان کرنے میں کلیدی کردار ادا کیا اور ملک بھر سے سیاحوں کو متوجہ کرنے کے ساتھ ساتھ اس کی نسل کے تحفظ کے حوالے شعور بھی اجاگر کیا۔

دُکھی حکام شیرنی کی لاش کو پھولوں سے لدے جنازے کی شکل میں تدفین کے لیے لے کر گئے (فوٹو: ٹوئٹر، ادیٹی گرگ)

اس کا بسیرا ایسے علاقے میں رہا جو مشہور انگریزی فلم ’جنگل بک‘ میں بھی دکھایا گیا ہے۔


News Source   News Source Text

WATCH LIVE NEWS

مزید خبریں
عالمی خبریں
مزید خبریں

Meta Urdu News: This news section is a part of the largest Urdu News aggregator that provides access to over 15 leading sources of Urdu News and search facility of archived news since 2008.