حکومت مہنگائی کم کرنےکی کوشش کررہی ہے، طاہر اشرفی

image

وزیراعظم کے نمائندہ خصوصی برائے مذہبی ہم آہنگی حافظ طاہر محمود اشرفی نے کہا ہے کہ حکومت مہنگائی کم کرنےکی کوشش کررہی ہے۔

تفصیلات کے مطابق وزیراعظم کے نمائندہ خصوصی برائے مذہبی ہم آہنگی حافظ طاہر محمود اشرفی نے پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا ہے کہ تین ربیع الاول سے بارہ ربیع الاول تک عشرہ رحمت العالمینﷺ منایا جارہاہے۔

انہوں نے کہا کہ ملک کلمہ طیبہ کی بنیاد پر قائم ہوا ، جس کا نظام شریعت کا نظام ہے لیکن بدقسمتی سے شریعت کا نظام نہ لاسکے ، نئی نسل کو شریعت پر رہنمائی نہیں دی جاتی بلکہ انتہا پسندی اور دہشت گردی کا فتنہ پھیل رہاہے ، سیرت اتھارٹی اس لئے بنائی کہ کوئی شخص سوچے سمجھے بغیر کوئی بھی بات نہ کرے۔

وزیراعظم کے نمائندہ خصوصی برائے مذہبی ہم آہنگی حافظ طاہر محمود اشرفی نے کہا کہ دین اسلام نے درخت سے جانوروں کے حقوق بھی بتائے ، جنگوں سے ہریالی و خوشحالی نہیں آتی لیکن ہمارے رسولﷺ کی تعلیمات یہ ہیں کہ جنگ میں سبز گھاس و درخت کو نہیں کاٹا جائےگا ، بارہ ربیع الاول کو سب سے بڑا اجتماع اسلام آباد میں ہوگا۔

حافظ طاہر محمود اشرفی نے کہا کہ ملک کو مدینہ ریاست بنانے کےلئے اپنی زندگیوں سے آغاز کرنا ہے اقلتیوں و عورتوں کے حقوق پر بات کی جا رہی ہے ، کچھ لوگ کہتے ہیں افغانستان کی طرح کا ملک میں نظام لانا چاہتے ہیں لیکن ہم ریاست مدینہ والا نظام لانا چاہتے ہیں جس میں سب کو انصاف ملے ، فیصل آباد میں جس طرح ملکی سلامتی اداروں و افواج پر گفتگو کی گئی اس پر قوم کا دل دکھا ہے۔

انہوں نے کہا کہ سیاسی میدان میں حد بندی مقرر کرنا ہوگی ، استغارہ کیا کریں جو سنت ہے ،  ملک کا نظام جن نہیں چلا رہے جنات اشرف المخلوقات ہیں ، انسان زیادہ طاقتور ہیں ، سلامتی کے ادارے ملک و قوم کےلئے ہیں جب وہ شہادتیں لیتے ہیں تو وہ قابل فخر ہے ، اگر پاکستان محفوظ ہے تو فوج کی وجہ سے ہے  خدارا ملک کو لیبیا شام نہ بنائیں۔

وزیراعظم کے نمائندہ خصوصی برائے مذہبی ہم آہنگی حافظ طاہر محمود اشرفی نے کہا کہ ڈی جی آئی ایس آئی پر فواد چوہدری کا بیان قوم کی ترجمانی ہے ، فوج حکومت و قوم کو علیحدہ نہیں سمجھتے ، سب ایک ہیں ، حکومت مہنگائی کم کرنےکی کوشش کررہی ہے۔

Adsence 300X250


News Source   News Source Text

WATCH LIVE NEWS

مزید خبریں
پاکستان کی خبریں
مزید خبریں

Meta Urdu News: This news section is a part of the largest Urdu News aggregator that provides access to over 15 leading sources of Urdu News and search facility of archived news since 2008.