بنا سنچری کے فرسٹ کلاس میں زیادہ رنز کا عالمی ریکارڈ قائم

image
کاؤنٹی چمپئین شپ کے ایک میچ میں سرے نے کینٹ کے خلاف بنا سنچری کے اننگ میں 671 رنز کا عالمی ریکارڈ قائم کر دیا۔میچ میں سرے کا کوئی بیٹسمین سنچری اسکور نہ کر سکا، سرے نے 9 وکٹوں کے نقصان پر 671 رنز بنائے۔

سرے کے افتتاحی بلے باز اولی پوپ اور ریان پٹیل نے پہلے دن بالترتیب 96 اور 76 رنز بنائے تھے، جیمی اوورٹن نے 92 گیندوں پر 93، بین فوکس نے 91، سیم کرن نے 78، کولن ڈی گرینڈ ہوم نے 66 اور جارڈن کلارک نے ناٹ آؤٹ 54 رنز بنائے۔ ڈین ورل نے بھی ناقابل شکست 44 رنز بنائے۔

جوابی اننگ میں کینٹ نے کھیل ختم ہونے تک ایک وکٹ کے نقصان پر 45 رنز بنا لئے ہیں، کینٹ کو اب بھی 626 رنز کے خسارے کا سامنا کرنا ہے۔

اس عالمی ریکارڈ کے بنانے میں سرے کی آخری وکٹ کی شراکت کا بھی اہم کردار ہے آخری دونوں بیٹمینوں کلارک اور ورال نے اس عالمی ریکارڈ کو اپنی ٹیم کے نام کیا جو نمیبیا نے 2010 میں یوگنڈا کے خلاف 609 رنز کے ساتھ بنایا تھا۔

کینٹ کی اننگ میں آؤٹ ہونے والے واحد بیٹسمین کرولی تھے جو 11 ویں اوور میں وکٹوں کے عقب میں آؤٹ ہوئے۔

مزید پڑھیں52 mins agoکھوٹہ سکہ کچھ نہ کرتے ہوئے بھی آئی پی ایل کا ریکارڈ بنا گیا

آؤٹ آف فارم اور تین سال سے سنچری کے قحط میں مبتلا...

4 hours agoاٹالین اوپن ٹینس، نوواک جوکووچ اور ایگا سویٹیک کوارٹر فائنلز میں

اٹالین اوپن ٹینس میں نوواک جوکووچ اور ایگا سویٹیک نے اپنے اپنے...

5 hours agoبسمہ معروف ویمینز کرکٹ ٹیم کی کپتان برقرار

پی سی بی نے آج تصدیق کی ہے کہ بسمہ معروف 23-2022...

5 hours agoمیڈیا پر خبریں چلنے کے بعد پی سی بی حرکت میں آگیا

پاکستان کرکٹ بورڈ نے میڈیا پر خبریں چلنے کے بعد چئیرمین پی...

7 hours agoبرینڈن میک کولم کو انگلش ٹیم کا کوچ بنانے پر مائیکل وان کا تشویش کا اظہار

انگلینڈ کے سابق کرکٹر مائیکل وان نے گیری کرسٹن کی جگہ برینڈن...

7 hours agoآل راؤنڈر شکیب الحسن نے کورونا سے نجات حاصل کر لی

بنگلہ دیش کے آل راؤنڈر شکیب الحسن نے کورونا کو شکست دے...

تازہ ترین نیوز پڑہنے کے لیے ڈاؤن لوڈ کریں بول نیوزایپ

General Rectangle – 300×250

News Source   News Source Text

WATCH LIVE NEWS

مزید خبریں
کھیلوں کی خبریں
مزید خبریں

Meta Urdu News: This news section is a part of the largest Urdu News aggregator that provides access to over 15 leading sources of Urdu News and search facility of archived news since 2008.