سفارتی تنازع: لبنانی وزیر اطلاعات جارج قرداحی عہدے سے مستعفی

image

لبنان کے وزیر اطلاعات جارج قرداحی نے خلیجی ممالک سے سفارتی تنازع کے بعد آج باضابطہ طور پر استعفیٰ دے دیا۔

فرانسیسی خبر رساں ایجنسی اے ایف پی کے مطابق جارج قرداحی نے کہا تھا کہ وہ آج دوپہر مستعفی ہوجائیں گے۔ وہ عہدے سے چمٹے رہنا نہیں چاہتے، اگر یہ ملک کیلیے فائدہ مند ہے تو وہ لبنان کو ایک موقع دینا چاہتے ہیں۔

لبنان کے ایوان صدر کی جانب سے بھی قرداحی کے استعفے کی تصدیق کردی گئی ہے۔

واضح رہے کہ جارج قرداحی کے یمن کی جنگ پر تبصرے نے سعودی عرب کے ساتھ سفارتی تنازع کھڑا کر دیا تھا جس کے بعد لبنانی رہنماؤں پر وزیر اطلاعات کو ہٹانے کے لیے دباؤ بڑھ رہا تھا۔

جارج قرداحی نے اپنی تقرری سے قبل ایک انٹرویو میں کہا تھا کہ ایران کے حمایت یافتہ حوثی اپنا دفاع کر رہے تھے اور یمن میں جنگ بند ہونی چاہیے۔

اس تبصرے پر سعودی عرب، متحدہ عرب امارات، کویت اور بحرین نے لبنان سے اپنے سفیروں کو واپس بلا لیا تھا جبکہ لبنان کے سفیروں کو بھی ملک چھوڑنے کی ہدایت کی تھی۔ متحدہ عرب امارات نے اپنے شہریوں پر لبنان کے سفر پر بھی پابندی لگا دی تھی۔

Square Adsence 300X250


News Source   News Source Text

WATCH LIVE NEWS

مزید خبریں

Meta Urdu News: This news section is a part of the largest Urdu News aggregator that provides access to over 15 leading sources of Urdu News and search facility of archived news since 2008.