کم کارڈیشین پر میرلن منرو کا تاریخی لباس ’خراب‘ کرنے کا الزام

image
امریکی ماڈل کم کارڈیشین اکثر ہی کسی نہ کسی حوالے سے خبروں کی زینت بنی رہتی ہیں لیکن اس مرتبہ ان پر ایک ’تاریخی لباس‘ خراب کرنے کا الزام عائد کیا گیا ہے۔

یہ لباس دراصل ہالی وڈ کی مشہور اداکارہ میرلن منرو کا ہے جو انہوں نے 1962 میں امریکی صدر جان ایف کینیڈی کی سالگرہ کے موقع پر پہنا تھا۔

کریم اور سنہری رنگ کے لباس میں ملبوس اداکارہ کی تصاویر آج پر بھی سوشل میڈیا پر موجود ہیں جس میں وہ امریکی صدر کے ساتھ کھڑی ہیں۔ 

اس موقع پر میرلن منرو نے صدر جان ایف کینیڈی کے لیے ’ہیپی برتھ ڈے‘ کا گانا بھی گایا تھا۔

خبر رساں ادارے اے ایف پی کے مطابق یہ تاریخی لباس رپلے نامی ایک نجی میوزیم کی ملکیت ہے جو اس نے 40 لاکھ 80 ہزار ڈالر کا خریدا تھا۔

گزشتہ ماہ نیو یارک میں ہونے والے میٹ گالا کی تقریب کے لیے کم کارڈیشین نے یہ لباس میوزیم سے ادھار لیا تھا۔

میٹ گالا کا شمار فیشن کی دنیا کے سب سے بڑے شوز میں ہوتا ہے جہاں دراصل ہالی وڈ اور انٹرٹینمنٹ انڈسٹری سے تعلق رکھنے والے فنکاروں کو اپنے منفرد سٹائلز دکھانے کا موقع بھی ملتا ہے۔

میریلین منرو کی تصاویر اکھٹی کرنے والے سکالٹ فارٹنر نے لباس کی پہلے اور بعد کی تصاویر سوشل میڈیا پر شیئر کرتے ہوئے دعویٰ کیا ہے کہ کم کارڈیشین کے پہننے کے بعد کپڑے کو چند جگہوں سے نقصان پہنچا ہے بلکہ لباس پر لگے ہوئے کچھ کرسٹلز بھی غائب ہیں۔

    

View this post on Instagram           A post shared by The Marilyn Monroe Collection (@marilynmonroecollection)

انہوں نے کہا کہ یہ لباس اب مستقل طور پر خراب ہو گیا ہے۔

سوشل میڈیا پر میوزیم انتظامیہ کو تنقید کا نشانہ بنایا گیا ہے کہ انہوں نے یہ تاریخی لباس کم کارڈیشین یا کسی بھی شخصیت کو پہننے کے لیے کیوں دیا۔

کم کارڈیشین کے متعلق کہا گیا تھا کہ لباس زیب تن کرنے کے لیے انہوں نے سخت ڈائیٹنگ پروگرام بھی شروع کیا تھا۔


News Source   News Source Text

مزید خبریں
آرٹ اور انٹرٹینمنٹ
مزید خبریں

Meta Urdu News: This news section is a part of the largest Urdu News aggregator that provides access to over 15 leading sources of Urdu News and search facility of archived news since 2008.